ای وی کنورزن کی حوصلہ افزائی کرنے والی پالیسیون کو بجٹ میں ملے فروغ

0
Zee Business

نئی دہلی: (یواین آئی) پیٹرول اور ڈیزل گاڑیوں کو الیکٹرک گاڑی میں تبدیل کرنےکےلئے ای وی کنورزن بنانے والی کمپنیوں نے وزیر خزانہ نرملا سیتارمن سے اس پر بھی ای وی کی طرح کی جی ایس ٹی لگانے اور اس آلے کو فروغ دینے والی پالیسیوں کو عام بجٹ میں شامل کرنے کی اپیل کی ہے۔ الیکٹرک گاڑیو کی بڑھتی ہوئی مقبولیت کے درمیان ای وی کنورزن کا بھی بازار تیار ہورہا ہے۔اس شعبہ میں کام کرنے والی کمپنی گوگواے 1 نے آئندہ بجٹ میں حکومت سے ای وی کنورزن کی حوصلہ افزائی کرنے والی پالیسیوں کو فروغ دینے کی اپیل کی ہے۔ ای وی کنورزن سے پیٹرول اور ڈیزل سے چلنے والی پرانی گاڑیوں کو پھر سے چلانا ممکن ہوسکتا ہے۔گوگواے 1 نے موٹرسائکل کےلئے ملک میں پہلی آرٹی او کے ذریعہ تصدیق شدہ الیکٹرک کنورزن کٹ لانچ کی ہے۔کمپنی ہائیبرڈ اور کمپلیٹ کنورزن کٹ کے ذریعہ سے موجودہ دوپہیا ،تپہیا اور کاروں کو الیکٹرک ٹیکنولوجی سے لیس کرتی ہے۔
کمپنی کے بانی شری کانت شندے نے یہاں یواین آئی سے کہا کہ موجودہ نظام میں کمپنی کو ہر ریاست میں وہاں کے محکمہ ٹرانسپورٹ سے اجازت لینی پڑتی ہے۔اس سے بہت زیادہ وقت لگتا ہے۔منظوری کے مرکوز نظام ہونے سےای وی کنورزن کے عمل کو تیز کرنا ممکن ہوگا۔
مسٹر شندے نے کہا کہ ہندوستان میں زیادہ تر لوگ اپنی گاڑی کو اپنی زندگی بھر کا ساتھ مانتے ہیں اور اسے بیچنانہیں چاہتے۔ایسے میں الیکٹرک کنورزن سے گاڑی کی عمربڑھ سکتی ہے اور اسے پانچ سے سات سال تک اور چلانا ممکن ہوسکتا ہے۔حکومت کو اس شعبہ میں بھی سبسڈی اور تعاون پالیسیوں کی سمت میں قدم بڑھانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ کنورزن کٹ پر 18 فیصد کی شرح سے جی ایس ٹی لگتا ہے۔ وہیں نئی گاڑی پر جی ایس ٹی پانچ فیصد ہے۔ہم امید کرتے ہیں کہ حکومت کنورزن کٹ پر بھی جی ایس ٹی کی شرح کم کریں،جس سے زیادہ سے زیادہ لوگ اپنے دوپہیا گاڑی کو الیکٹرک میں تبدیل کرنے کےلئے حوصلہ افزائی کرے گی۔