سری نگر میں مشتبہ جنگجوؤں کی پولیس پر فائرنگ،دو اہلکارہلاک

0

سری نگر: سری نگر کے مضافاتی علاقہ باغات برزلہ میں جمعے کو مشتبہ جنگجوؤں نے پولیس کی ایک پارٹی پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں دو پولیس اہلکار ہلاک ہوگئے۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جنگجوؤں نے جمعے کو سری نگر کے باغات برزلہ میں تعینات پولیس کی ایک پارٹی پر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے نتیجے میں دو اہلکار شدید زخمی ہوگئے۔
انہوں نے بتایا کہ زخمی اہلکاروں کو فوری طور علاج ومعالجے کے لئے برزلہ میں ہی واقع ہڈیوں کے اسپتال منتقل کیا گیا۔
مذکورہ ذرائع نے بتایا کہ وہاں سے ایک پولیس اہلکار سہیل احمد کو شری مہاراجہ ہری سنگھ اسپتال ( ایس ایم ایچ ایس) ریفر کیا گیا جہاں وہ زخمی کی تاب نہ لاکر چل بسے جب کہ بعد ازاں دوسرے زخمی اہلکار محمد یوسف نے یہاں پولیس اسپتال میں دم توڑ دیا۔
میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ایس ایم ایچ ایس ڈاکٹر نذیر چودری نے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ سہیل احمد شدید زخمی ہوئے تھے اور وہ زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھے۔
دریں اثنا حملے کے فوراً بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو محاصرے میں لے کر حملہ آوروں کی بڑے پیمانے پر تلاش شروع کر دی ہے۔
قبل ازیں کشمیر زون پولیس نے واقعے کے متعلق اپنے آفئشل ٹویٹر ہینڈل پر ایک ٹویٹ میں کہا: ’جنگجوؤں نے سری نگر کے برزلہ علاقے میں پولیس کی ایک پارٹی پر حملہ کر دیا۔ اس واقعے میں 2 پولیس اہلکار زخمی ہوگئے۔ انہیں علاج و معالجے کے لئے اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ علاقے کو محاصرے میں لیا گیا ہے‘۔

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here