دہلی ہائی کورٹ نے سشانت سنگھ پر مبنی فلم نیائے: دی جسٹس” کی ریلیز پر روک لگانے سے متعلق عرضی خارج کی

0
image:livelaw.in

نئی دہلی : (یو این آئی) دہلی ہائی کورٹ نے بالی ووڈ کے آنجہانی اداکار سوشانت سنگھ راجپوت پر مبنی فلم “نیائے: دی جسٹس” کی ریلیز پر روک لگانے کی مانگ کے سلسلے میں دائر عرضی کو آج خارج کردیا ۔
دہلی ہائی کورٹ کے جسٹس سنجیو نرولا نے سوشانت سنگھ راجپوت کے والدکرشن کشور سنگھ کی عرضی خارج کی حالانکہ عدالت نے فلم پرڈیوسرز کو رائلٹی ، لائسنسنگ ، پرو لائسنسنگ اور فلم سے ہونے والے منافع کی تمام تفصیلات جوائنٹ رجسٹرار کے سامنے پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔ فلم میں اپنے بیٹے کا استعمال ہونے سے سشانت سنگھ کے والد کو اعتراض تھا ۔انہوں نے اپنی عرضی میں کہا کہ لوگ ان کے بیٹے کی موت کا غلط فائدہ اٹھارہے ہیں ۔ عرضی میں یہ بھی دلیل دی گئی کہ فلم ساز صورتحال کا غلط فائدہ اٹھانے کی کوشش کررہے ہیں اور اس طرح کی فلم ، ویب سیریز، کتاب، انٹرویو اور دیگر مواد کی پبلی کیشن سے ان کے بیٹے کی ساکھ کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔
درخواست گزار نے ساکھ کو نقصان پہنچانے اور ذہنی طور پر پریشان کرنے کے لئے 2 کروڑ روپے بطور معاوضے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ عدالت نے گذشتہ اپریل میں مختلف فلم سازوں سے متعلقہ عرضی پر اپنا موقف رکھنے کے لئے کہا تھا۔
سوشانت راجپوت کی زندگی پر مبنی دیگر آنے والی فلموں میں ‘سوسائیڈ یا مرڈر : اے اسٹار واز لاسٹ ‘ ، ‘ششانک’ اور ایک نامعلوم پروجیکٹ شامل ہیں۔

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here