بانڈی پورا میں فوجی جوانوں نے نو سالہ بچی کو اغوا کرنے اور اس کے ساتھ چھیڑ چھاڑکی

0

سری نگرَ پی ڈی پی صدراورسابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کا کہنا ہے کہ تین فوجی جوانوں جنہوں نے شمالی کشمیر کے ضلع بانڈی پورہ میں مبینہ طور نو سالہ بچی کو اغوا کرنے کی کوشش کی تھی، کے خلاف درج کیا جانے والا کیس معاملے کو دفنانے کی ایک کوشش لگتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ مذکورہ فوجیوں پر چھیڑ چھاڑ سے متعلق سیکشن 354 کے تحت جرم عائد نہیں کیا گیا ہے۔
موصوفہ نے ان باتوں کا اظہار بدھ کے روز اپنے ایک ٹویٹ میں کیا۔
ان کا ٹویٹ میں کہنا تھا:’بانڈی پورہ میں جن فوجیوں نے پانچ سو روپیے کا نوٹ دکھا کر ایک نو سالہ بچی کو اپنی کار میں لے جانے کی کوشش کی، کے خلاف درج ایف آئی آر میں ان پر چھیڑ چھاڑ سے متعلق سیکشن 354 کے تحت جرم عائد نہیں کیا گیا ہے۔ ایسا لگتا ہے کہ یہ ایف آئی آر اس معاملے کو دفن کرنے کا ایک معمہ ہے‘۔
قبل ازیں منگل کے روز میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا کہ پولیس نے ضلع بانڈی پورہ میں ایک نو سالہ بچی کو مبینہ طور اغوا کرنے کی کوشش کرنے والے تین فوجی جوانوں کے خلاف کیس درج کرکے تحقیقات شروع کی ہیں۔

 

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here