دبئی (یواین آئی) سابق ہندوستان کے کپتان انل کمبلے کی قیادت والی بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی کرکٹ کمیٹی نے ایل بی ڈبلیو آؤٹ فیصلوں میں ڈی آر ایس (ڈسیزن ریویو سسٹم) ضابطے میں تبدیلی کو منظوری دے دی ہے حالانکہ کمیٹی نے امپائرس کال ضابطے کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ بین الاقوامی کرکٹ میں یہ ضابطہ برقرار رہے گا ۔
کرکٹ کمیٹی نے یہاں منگل کے روز میٹنگ میں فیصلے کے مطابق اب ایل بی ڈبلیو آؤٹ کے ریویو کے لئے وکٹ ژون کے اونچائی کو بڑھاکر اسٹمپ کے اوپری حصے تک کردیا گیا ہے ۔ یعنی اب ری ویو لینے پر بیلس کے اوپر تک کی اونچائی پر غور کیا جائے گا جبکہ پہلے بیلس کے نچلے حصے تک کی اونچائی پر غور کیا جاتا تھا۔ اس سے وکٹ ژون کی اونچائی بڑھ جائے گی۔ اس کے علاوہ اب ایل بی ڈبلیو آوٹ پر ڈی آر ایس کے سلسلے میں فیصلے کرنے سے پہلے فیلڈربھی امپائر سے پوچھ سکے گا کہ گیند کو کھیلنے کی اصل میں کوشش کی گئی تھی یا نہیں۔ ساتھ ہی اب تھرڈ امپائر شارٹ رن سے متعلق سبھی فیصلوں کا جائزہ لے گا اور کوئی غلطی ہوتی ہے تو امپائر اگلی گیند پھینکے جانے سے پہلے اسے صحیح کرے گا۔
میٹنگ میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ بین الاقوامی کرکٹ بحالی کے لئے 2020 میں لاگو کئے گئے عبوری کووڈ19 ضابطے جاری رہیں گے ۔ میٹنگ کے بعد جاری ایک بیان میں کرکٹ کمیٹی کے سربراہ انل کمبلے نے کہا، ‘‘ ڈی آر ایس کا مضبوط اصول اس لئے ، تاکہ میچ کے دوران واضح غلطیوں کو صحیح کیا جاسکے ۔ ساتھ ہی یہ بھی یقینی ہوکہ میدان پر فیصلہ کرنے والوں کے طور پر امپائروں کا رول بنارہے ۔ امپائرس کال سے ایسا ہی ہوتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ اس کا برقرار رہنا اہم ہے ’’۔
حال ہی میں ، ہندوستانی کپتان وراٹ کوہلی نے امپائرس کال ضابطے پر اعتراض ظاہر کیا تھا۔ انہوں نے اس ضابطے کو گمراہ کن قرار دیتے ہوئے کہا کہ اگر گیند کا ایک چھوٹا سا حصہ بھی اسٹمپ سے ٹکرا جاتا ہے تو پھر بلے باز کو آؤٹ دیا جائے ۔

آپ کے تاثرات
+1
2
+1
0
+1
0
+1
1
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here