ہماچل میں ووٹ ڈالنے کے بعد 106 سالہ ووٹر کی موت

0

ہمیر پور (یو این آئی) : ہماچل پردیش کے اونا ضلع کے ایک 106 سالہ ووٹر نے بستر مرگ پر اپنے حق رائے دہی کا استعمال کیا اور پوسٹل بیلٹ کے ذریعے ووٹ ڈالنے کے دو گھنٹے بعد سلہنا گائوں کے بیرو رام کی موت ہوگئی۔
ایک سرکاری ترجمان نے جمعہ کو یو این آئی کو بتایا کہ مسٹر بیرو رام نے جمعرات کی شام اسمبلی انتخابات کے لیے بنائے گئے موبائل بوتھ پر اپنا ووٹ ڈالا اور شام 4.30 بجے آخری سانس لی۔ بیرو رام کے تین بیٹے ، ایک بیٹی، تین پوتے ، دو پوتیاں، دو پڑپوتیاں اور پانچ پڑپوتیاں ہیں۔ ان کی آخری رسومات جمعہ کو ادا کی جائیں گی۔ ہماچل میں جمعرات کو 7,800 لوگوں نے پوسٹل بیلٹ کے ذریعے اپنا ووٹ ڈالا، جس سے بیلٹ ووٹوں کی تعداد 12,893 ہوگئی۔ دوسری طرف، فتح پور اسمبلی حلقہ کی جگنولی پنچایت کے ایک اور ووٹر بنتو دیوی (106 سال) نے بیلٹ پیپر کے ذریعے گھر سے ووٹ ڈالا۔ الیکشن ڈیپارٹمنٹ کی ٹیم ان کے گھر گئی اور خفیہ رائے شماری کا عمل مکمل کیا۔ محترمہ بنتو دیوی نے جمہوریت کے تہوار میں شرکت کرنے کے قابل ہونے پر اطمینان کا اظہار کیا۔ انہوں نے تمام ووٹروں سے 12 نومبر کو ووٹ ڈالنے کی اپیل بھی کی۔