Image:NDTV

ریاستوں کوٹیسٹ، ٹریک اور ٹریٹ پالیسی پر عمل کرنے کی صلاح
نئی دہلی (یواین آئی) : مرکزی وزارت داخلہ نے ملک کے کچھ حصوں میں کورونا کی وبا کے بڑھتے معاملوں کے پیش نظر ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے ٹیسٹ ،ٹریک اور ٹریٹ یعنی کورونا کی جانچ،مریض کے رابطے میں آنے والے لوگوں کا پتہ لگانے اور مریضوں کے علاج کی3 سطحی پالیسی پر تیزی اور پوری سختی سے کام کرنے کو کہا ہے۔ وزارت نے کورونا کی وبا کے انفیکشن پر روک لگانے کیلئے منگل کو جاری ہدایات میں 3 سطحی پالیسی کے ساتھ ساتھ کورونا سے متعلق پروٹوکول کو پوری طرح نافذ کرنے اور ٹیکہ کاری مہم کو تیز کرنے کی بھی بات کہی ہے۔اس کے ساتھ ہی مختلف سرگرمیوں کیلئے پہلے سے جاری ضابطہ عمل کو بھی سختی سے نافذ کرنے کی مرکز اور ریاست حکومتوں کو ہدایت دی گئی ہے۔ آر ٹی پی سی آر ٹیسٹ کی تعداد بڑھائے جانے پر بھی خصوصی توجہ دینے کو کہا گیا ہے۔نئی ہدایات یکم اپریل سے شروع ہوں گی اور 30اپریل تک نافذ رہیں گی۔ہدایات میں اس بات پر زور دیا گیا ہے کہ کورونا کے خلاف مہم میں اب تک ملک نے، جو کامیابی حاصل کی ہے، اسے برقرار رکھنے کیلئے ہر ممکن کوشش اور اقدامات کئے جانے چاہئیں۔ہدایات میں کہا گیا ہے کہ کنٹینمنٹ زون کے باہر سبھی سرگرمیاں پہلے سے ہی کھولی جا چکی ہیں اور اس کیلئے ضابطہ عمل بھی نافذ ہیں، لیکن انہیں پوری طرح اور سختی سے نافذ کئے جانے کی ضرورت ہے۔ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے آر ٹی پی سی آرکی جانچ کو 70 فیصد تک پہنچانے کو کہا گیا ہے۔ متاثرہ لوگوں کا پتہ چلنے پر انہیں الگ کرنے اور رابطوں کا پتہ لگانے اور مریضوں کا علاج کرنے پر بھی زور دیا گیا ہے۔ ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے ضرورت پڑنے پر چھوٹے اور بڑی سطح پر کنٹینمنٹ زون بنانے اور ان کی نگرانی کرنے کیلئے کہا گیا ہے ۔ کنٹینمنٹ زون میں صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت کی ہدایات اور اقدامات کو پوری طرح نافذ کرنے پر بھی زور دیا گیا ہے۔ملک بھر میں کورونا کی وبا سے بچاؤ کیلئے ماسک کے استعمال ،سماجی دوری بنائے رکھنے اور صاف صفائی پر خصوصی توجہ دینے پر بھی زور دیا گیا ہے۔ ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو پہلے کی طرح حالات کا جائزہ لینے کی بنیاد پر مقامی سطح پر پابندی لگانے کی اجازت بھی دی گئی ہے۔ حالانکہ ریاستوں کے اندر اور ایک ریاست سے دوسری ریاست کے درمیان لوگوں اور سامان اور گاڑیوں کی آمدو رفت پر کسی طرح کی روک نہیں لگائی گئی ہے۔
کچھ ریاستوں میں کورونا ٹیکہ کاری کی سست رفتار پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس میں تیزی لانے کی بات کہی گئی ہے ۔

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here