برطانیہ میں بادشاہت کے خاتمے کیلئے مہم کا آغاز

0
irshadgul.com

لندن(ایجنسیاں) : برطانیہ میں بادشاہی نظام کے مخالف گروپ ریپبلک نے ملکہ برطانیہ کی پلاٹینم جوبلی کے جشن سے قبل ملک میں ’ناٹ این ادر 70‘ مہم کا آغاز کردیا ہے۔ ریپبلک گروپ کے چیف ایگزیکٹیو گراہم اسمتھ نے بادشاہت کو ایک ’گھٹیا ادارہ‘قرار دے دیا ہے۔اتنا ہی نہیں برطانیہ میں ایک اور بحث کا بھی آغاز ہوگیا ہے وہ یہ کہ برطانوی شاہی خاندان کے اخراجات کون اْٹھاتا ہے۔جس کے جواب میں سوشل میڈیا پر کچھ شاہی مداحوں نے دلیل دی کہ ’برطانوی عوام شاہی خاندان کے اخراجات ادا نہیں کرتے‘۔ایک صارف نے کہا کہ ’یہ رقم شاہی خاندان کے کام کرنے والے شاہی افراد کو بطور خودمختار گرانٹ فراہم کی جاتی ہے‘۔شاہی مبصر رچرڈ پامر نے اس دعوے کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ ’یہ کہنا کہ کراؤن اسٹیٹ کو رقم بطور خودمختار گرانٹ ادا کی جاتی ہے، یہ بات 100 فیصد غلط ہے، ایک جھوٹ ہے‘۔ انہوں نے مزید کہا کہ’خودمختار گرانٹ ٹیکس دہندگان کے ذریعے ہی ادا کیا جاتا ہے‘۔ اس کے بعد کراؤن اسٹیٹ کی جانب سے ٹوئٹر پر جاری کردہ ایک بیان سے ایسا لگتا ہے کہ شاہی مبصررچرڈ پامر نے جع کچھ بھی کہا وہ سچ ہے۔