نقل کرنے کا انوکھا طریقہ: چپل میں لگایا’بلوٹوتھ ڈیوائس‘، 3ریٹ امیدواروں سمیت 5 گرفتار

0
image:baseeratonline

بیکانیر(ایجنسی): ریٹ (ٹیچر اہلیت ٹیسٹ) امتحان میں نقل کو روکنے کے لئے محکمہ پولیس لگاتار کارروائی کرتی نظر آرہی ہے۔ لیکن کسی بھی صورت میں،جو لوگ امتحان پاس کرنے کے لیے نقل کرنے کے نئے نئے طریقے ایجاد کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ بیکانیر میں چپل کی مدد سے نقل کرانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ درحقیقت ایک ایسا گینگ بے نقاب ہوا ہے، جو چپل کی مدد سے NEET امتحان میں نقل کروانے کی کوشش کر رہا تھا۔ اس معاملے میں بیکانیر پولیس نے 3 لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ جو چپل کی مدد سے نقل کروانے کی کوشش کر رہے تھے۔ REET امتحان میں حکومت کی طرف سے جاری کردہ ہدایات کے مطابق ،چپل پہن کر ہی داخلہ دیا جاتا ہے۔ اس گروہ نے کاپی حاصل


کرنے کے لیے منفرد چپل ایجاد کی۔ یہ سینڈل بلوٹوتھ ڈیوائس سے لیس ہے۔ جو داخلہ کے دوران امیدوار امتحانی مرکز میں اساتذہ کی نظروں سے امتحان لینے میں کامیاب ہو سکتا ہے۔ امتحان کے ہال میں داخل ہونے کے بعد امیدوار اس بلوٹوتھ ڈیوائس کو اپنے کان میں ڈالتا ہے۔ یہ بلوٹوتھ ڈیوائس مرکز کے باہر بیٹھے شخص کے موبائل سے جڑا ہوا ہے جو اسے کاپی کروانے میں مدد کرتا ہے۔

نقل کرنے کے لیے بنائے گئے اس انوکھے چپل کی قیمت سن کر آپ حیران رہ جائیں گے۔ اس چپل کی قیمت 6 لاکھ روپے ہے۔ نقل کرنے والے کا مستقبل سوارنے میں چپل کا اہم رول ثابت ہونے والا تھا۔ بیکانیر کی ایس پی پریتی چندرا نے بتایا کہ اس معاملے میں 3 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ اس طرح کی چپل ریاست بھر میں تقریبا 25 لوگوں کو فروخت کی گئی ہے۔ ایسے میں پولیس کے لیے یہ ایک چیلنج ہے کہ یہ چپل کس ضلع میں پہنچی ہے اور کون امیدوار ہے ، اپنے مستقبل کی منصوبہ بندی چپلوں کی مدد سے کر رہا ہے۔ فی الحال،پولیس اس معاملے میں تحقیقات جاری رکھے ہوئے ہے۔ اس کے ساتھ ہی ساتھ چپلوں کی تلاش بھی جاری ہے۔یہاں ایک امیدوار بلوٹوتھ ڈیوائس کو چپل میں چھپا کر امتحان
دینے والا پکڑا گیا ہے۔ پولیس نے اسے گرفتار کر لیا ہے۔ امیدوار چورو کا رہائشی ہے۔ موصولہ معلومات کے مطابق ملزم کے یہاں پکڑے جانے کے بعد تمام امیدواروں کے جوتے اور چپل کھول دی گئی۔

 

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
1
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here