عمر عبداللہ نے غیر ملکی سفارتکاروں کے دو روزہ دورہ پر اپنے رد عمل کا ظاہر کیا

0
Image:Ht

سری نگر: نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے غیر ملکی سفارتکاروں کو کشمیر کا دورہ کرنے کا شکریہ کرتے ہوئے ان سے اپنے ممالک کے اصلی سیاحوں کو جموں وکشمیر بھیجنے کی اپیل کی ہے۔
موصوف نے جمعرات کے روز غیر ملکی سفارتکاروں کے دو روزہ دورہ جموں وکشمیر پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: ’کشمیر کا دورہ کرنے پر آپ کا مشکور ہوں۔ اب آپ مہربانی اپنے اپنے ممالک سے کچھ اصلی سیاحوں کو جموں وکشمیر کے دورے پر بھیج دیں‘۔

بتادیں کہ جموں و کشمیر کے دو روزہ دورہ پر آئے 24 ممالک سے تعلق رکھنے والے ایک اعلیٰ سطحی وفد نے بدھ کے روز سری نگر میں چنندہ سیاسی جماعتوں،نومنتخب ڈی ڈی سی چیئر پرسنوں و دیگروفود سے ملاقات کی جب کہ جمعرات کو اس وفد کے اراکین نے جموں میں جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا،جموں وکشمیر ہائی کورٹ کی جسٹس جسٹس گیتا متل کے علاوہ مختلف وفود سے بات چیت کی۔
نیشنل کانفرنس،پی ڈی پی اور کانگریس کا الزام ہے کہ انہیں مذکورہ وفد سے ملاقی ہونے کی دعوت نہیں دی گئی۔
پی ڈی پی صدر اور سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے غیرملکی سفارتکاروں کے اس دورہ جموں و کشمیر پررد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ وفود جموں و کشمیر کا دورہ کرتے رہیں گے لیکن یہاں کی صورتحال ٹھیک نہیں ہے۔
سینئر کانگریس لیڈر اور سابق مرکزی وزیر پروفیسر سیف الدین سوز نے غیر ملکی سفارتکاروں کے اس دورہ جموں وکشمیر کو ایک لاحاصل مشق قرار دیا۔

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here