150 سال پرانے جیل کی دیوار گرنے سے 21 قیدی زخمی، 8 کی حالت سنگین

0
timesnowhindi.com

بھنڈ: (یو این آئی) مدھیہ پردیش کے بھنڈ ضلع ہیڈکورٹر پر آج صبح ضلع جیل میں دو بیرکوں کی دیوار گرجانے سے ملبے میں دب کر 21 قیدی زخمی ہوگئے،جن میں سے 8 کو سنگین زخم آئے ہیں۔
متاثرہ قیدیوں کو دوسرے قیدیوں کی مدد سے جیل انتظامیہ نے باہرنکالا اور اسپتال پہنچایا۔ ایک کو زیادہ سنگین حالت کے پیش نظر گوالیار بھیجا گیا ہے۔
جیل ذرائع کے مطابق صبح تقریباً پانچ بجے پہرے داروں نے جیلر کو بریک نمبر 6 اور 7 کا پلاسٹر گرنے کی اطلاع دی۔ قیدیوں نے بتایا کہ بارش کی وجہ سے مسلسل آنے سے پرانی دیوار ڈیہہ سکتی ہے۔ جیل انتظامیہ قیدیوں کو باہر نکالنے کے لئے بیرک کھولنے لگی، تبھی بیرکوں کی دیوار ڈیہہ گئی۔ اس حادثے میں 21 قیدی ملبے میں دب گئے، جنہیں فوری طور پر باہر نکالا گیا۔اس کے بعد ضلع انتطامیہ اور اسپتال انتطامیہ کو جیل منیجمنٹ کی جانب سے اطلاع دی گئی اور ایمبولینس بلائی گئی۔
بتایا گیا ہے کہ جیل کی عمارت کی تعمیر 1958 میں ہوئی تھی۔ اس وقت جیل میں 172 قیدی رکھے جانے کا انتظام تھا۔ اس دو منزلہ جیل کی عمارت کے چھوٹے چھوٹے بیرکوں میں 50 سے 60 قیدی رکھے جارہے ہیں۔ اس وقت 282 قیدی یہاں بند ہیں۔
جیلر او پی پانڈے نے بتایا کہ جیل کی دیوار میں پانی کے رساؤ کے تعلق سے انہوں نے محکمہ تعمیر عامہ کو خط لکھا ہے۔ دیوار پانی کے رساؤ کی وجہ سے گری ہے۔ وقت رہتے قیدیوں کو باہر نکالا گیا۔ انہوں نے تصدیق کی کہ 21 قیدی زخمی ہوئے ہیں۔
کلیکٹر ڈاکٹر ستیش کمار ایس نے بتایا کہ جیل کی دیوار گرنے سے قیدی زخمی ہوئے ہیں۔ اس کی جانچ کرائی جائے گی۔

آپ کے تاثرات
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0
+1
0

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here